اردو بلاگرز کے تبصروں کے جوابات اورمیرا موقف


میرے بلاگ پر کچھ تبصرہ نگار مجھ سے خفا نظر آتے ہیں ، شاید میں ہی غلط ہوں گا، تاہم ذیل میں ان کے تبصروں کے جوابات ایک جگہ اکٹھے کر رہا ہوں، تمام احباب میری اردو محفل پر لکھی جانے والی تحریر ایک دفعہ پڑھ لیں، پھرپھر کوئی رائے قائم کریں – کچھ بلاگرز شاید میرے طرز عمل سے ناراض ہیں مگر کھل کر اسکا اظہار نہیں کر رہے، اگر آپ کو میرا طرز عمل غلط لگتا ہے تو میرے بلاگ پر کمنٹس دے دیں، دوسری جگہوں پر کیا فائدہ، تاہم میں کچھ غلط فہمیاں دور کردوں تو یقینن اچھا ہو گا

پہلی بات : محفل کے ایک منتظم کہ رہے ہیں

یاد رہے کہ یاسر کا بس چلے تو تمام قادیانیوں کو قتل کر دے۔

میں نے کسی کے قتل کا فتوی جاری نہیں کیا، میں نے صرف اپنی جذباتی کیفیت کا اظہار کیا، ظاہر ہے میں اپنی بات پر عمل کرنے سے پیشتر علما سے رابطہ کروں گا، اور یہ بات میں نے ساتھ لکھی ہوی ہے تحریر میں

دوسری بات: منتظم صاحب پھر کہتے ہیں

بین کرنے کی وجہ یہ نہیں تھی بلکہ جب یاسر کا تھریڈ محفل کے قواعد و ضوابط کے مطابق ڈیلیٹ کیا گیا تو یاسر نے محفل کے منتظمین پر قادیانی ہونے کا الزام لگایا۔

یہ بات غلط بیانی ہے ، میں نے کسی کے عقیدے پر الزام نہیں لگایا، میری بات کہنے کا طریقہ ایک سوال پر مشتمل تھا، جس کا ذمہ دار فرد کو جواب دینا چاہیے تھا۔

تیسری بات: قادیانیوں کو مرتد کہنا میری ذاتی رائے قرار دیا جا رہا ہے

کئی علما قادیانیوں، مرزائیوں یا احمدیوں کو کافر اور مرتد قرار دے چکے ہیں، پاکستانی آئین کے مطابق بھی قادیانی مسلمان نہیں۔ یقینن آئین پاکستان میرے ذاتی رائے پر تو نہیں بنا۔اس لیے ایسا مت کہا جائے کہ قادیانیوں کے مرتد ہونا میری ذاتی رائے ہے۔

چوتھی بات۔ محفل فورم کے ممبران، الف نظامی اور صدیق صاحب بھی اس بات کا اعتراف کر چکے ہیں

کہ قادیانیوں کے متعلق محفل انتظامیہ سننا بھی گوارا نہیں کرتی اور معلومات حذف کر دی جاتی ہیں۔

قادیانیوں کے جرم اتنا بڑا ہے کہ کسی پاکستانی کو ، کسی آزادی کے علمبردار کو قادیانیوں کے متعلق بالکل آواز بلند نہیں کرنی چاہیے، اگر کوئی کرے تو وہ کافر نہیں ہو گا میری نظر میں، تاہم اللہ کے حضور گنہگار ہونے کا خدشہ ضرور رہے گا، باقی اللہ بہتر جاننے والا ہے

پانچویں بات، محفل کے منتظمین کا انٹرنیٹ یوزرز کے ساتھ رویہ

میرا کسی کی مسلمانی پر شک تو آپ کو نظر آ گیا، یہ بھی دیکھ لیجیے، اردو محفل کے منتظم کی یہ بات بھی ضرور ملاحظہ فرمایے ، جاوید گوندل کے تبصرہ پر زیک صاحب کا تبصرہ

نہ مجھے اردو بلاگرز سے کچھ لینا دینا ہے نہ احمدیوں سے اور نہ تم جیسے مسلمانوں سے۔

کیا ایک منتظم اور انٹرنیٹ پر اردو کے سینیر فرد کا لب و لہجہ اور طرز تکلم ایسا ہونا چاہیے؟ پھر منتظم صاحب فرما رہے ہیں

لکھنا تو میں نے بس یہی تھا مگر پھر جاوید گوندل کا تبصرہ پڑھ لیا۔ واہ کیا شان سے جاوید نے اردو بلاگرز کو قادیانی یا قادیانی نواز اور پکا مسلمان میں تقسیم کرنے کا پروگرام بنایا ہے!! کدھر گئ اردو بلاگر کمیونٹی کی بات؟ کدھر گیا بلاگرز کے لئے ضابطہ اخلاق کا ذکر؟ یہاں تو ایک لنک نہ دینے پر جاوید فتوٰی جاری کر رہا ہے۔

میں اتنا ضرور کہنا چاہوں گا، مجھے ایسی اردو کمیونٹی سے، ایسے پاکستانیوں سے جو نبی کریم صلی اللہ علیہ والہ وسلم کے گستاخ کو اپنے بیچ برداشت کر سکتے ہیں، جو اس کی صحبت میں بیٹھنے کو غلط خیال نہیں کرتے، مجھے ایسے افراد سے کویی تعلق، دوستی، رشتہ نہیں رکھنا ۔ قادیانیوں کو اردو بلاگنگ میں شامل رکھنے کی کسی تجویز سے، چاہے وہ اردو بلاگنگ کے فائدے میں جا رہی ہو، میں اتفاق نہیں کروں گا، اور نہ ایسی کمیونٹی کا حصہ بنوں گا، مجھے اردو سے زیادہ اپنا ایمان عزیز ہے، اردو بلاگنگ کی ترقی کے لیے میں اپنے نبی کی آن قربان نہیں کر سکتا۔بقیہ بلاگرز کے ساتھ میرا نہ کوئی شکوہ ہے نہ کوئی اور مسلہ

میرا پاکستان نے کہا کہ میں لوگوں کی ذاتیات پر تنقید کرتا ہوں ، اس بات کو میں مانتا ہوں، ہاں مجھے سے دو چار بار غلطی ہوی ہے، اور جن حضرات کو میرے طرز عمل نے تکلیف دی میں ان سے شرمندہ بھی ہوں اور معافی بھی مانگتا ہوں۔

مگرکسی بھی مرتد سے نہیں، مرتد سے سختی سے بات ہی کرنی چاہیے، وہ نرمی کا بالکل حقدار نہیں، مرتدین سے کیسا طرز عمل رکھنا ہے اسکی عملی مثال خلیفہ اول حضرت ابو بکر صدیق نے مہیاکی، میں ، آپ یا کوی اور کون ہوتے ہیں فیصلہ کرنے والے یا مرتدین سے نرم رویہ اختیار کرنے کا مشورہ دینے والے، اور ہاں یہ بات صرف اور صرف مرتدین کے لیے کہی ہے ، اور کسی سے نہیں


About Yasir Imran

Yasir Imran is a Pakistani living in Saudi Arabia. He writes because he want to express his thoughts. It is not necessary you agree what he says, You may express your thoughts in your comments. Once reviewed and approved your comments will appear in the discussion.
This entry was posted in Features, Urdu and tagged , , , . Bookmark the permalink.

12 Responses to اردو بلاگرز کے تبصروں کے جوابات اورمیرا موقف

  1. bdtmz says:

    کسی کے مرتد ہونے یا نہ ہونے کا فیصلہ تم یا میں کریں یا اللہ؟ اور اللہ ہی سب کے دلوں کا بھید جانتا ہے۔ اپنی ہٹ دھرمی سے باز آ جاؤ ایسے اسلام کا کسی کو فائدہ نہیں۔

  2. فیصل says:

    مجھے ایک بات کی سمجھ نہیں آئی کہ قادیانی مرتد کیسے ہیں؟ مرتد تو غالبا وہ ہوتا ہے جو اسلام قبول کر کے پھر اس سے پھر جائے جبکہ پاکستان میں تو قادیانی اب پیدا ہی قادیانی یعنی غیر مسلم ہوتے ہیں۔
    ناچیز کے علم میں اضافہ فرمائیں۔
    شکریہ

  3. Yasir Imran says:

    دو قسم کے قادیانی ہوتے ہیں ، ایک تو وہ جو پیدا ہی قادیانی ہوے
    دوسرے وہ جو مسلمان سے قادیانی ہوے
    میں نے تحریر میں لفظ علما پر ایک ربط دیا ہے، جہاں ایک فتوی موجود ہے، وہ دیکھ لیں

  4. Zack says:

    میں نے کسی کے قتل کا فتوی جاری نہیں کیا

    یہ کس نے لکھا تھا؟

    میرا تو دل کرتا ہے کہ سب کو قتل کر دیا جائے

    آگے چلتے ہیں۔

    میں نے کسی کے عقیدے پر الزام نہیں لگایا، میری بات کہنے کا طریقہ ایک سوال پر مشتمل تھا، جس کا ذمہ دار فرد کو جواب دینا چاہیے تھا۔

    سوال تم نے یہ پوچھا تھا:

    کیا اس فورم کی انتظامیہ قادیانیوں پر مشتمل ہے؟

    اسے الزام نہیں کہیں گے تو کیا کہیں گے؟ وہ انگریزی میں کہتے ہیں کہ یہ ایسا ہی سوال ہے جیسا کہ پوچھا جائے کہ

    When did you stop beating your wife?

    قادیانیوں کو مرتد کہنا میری ذاتی رائے قرار دیا جا رہا ہے

    مرتد کے لئے پہلے مسلمان ہونا ضروری ہے۔

    قادیانیوں کے متعلق محفل انتظامیہ سننا بھی گوارا نہیں کرتی اور معلومات حذف کر دی جاتی ہیں۔

    جھوٹ۔ اس وقت بھی محفل پر تلاش کر کے معلوم کیا جا سکتا ہے کہ وہاں قادیانیوں کے خلاف کتنے تھریڈ موجود ہیں۔

    رہا میرا جاوید گوندل کو جواب جو میرا پاکستان پر پڑھا جا سکتا ہے تو تمام تبصرے تو پڑھو۔ گوندل نے صرف قادیانیوں کے خلاف بات نہیں کی تھی بلکہ تجویز پیش کی تھی کہ قادیانی مخالف مواد انٹرنیٹ پر پوسٹ کیا جائے اور پھر جو اردو بلاگر اسے اپنے بلاگ سے لنک نہ دے اسے بھی قادیانی یا قادیانی نواز سمجھ لیا جائے۔ یہ جہالت سے زیادہ کچھ نہیں ہے۔

    یہ بھی یاد رہے کہ مجھے بلاگنگ کرتے سات سال سے زیادہ ہو چکے ہیں اور اردو میں بلاگنگ کرتے بھی ساڑھے پانچ سال۔ اردو محفل کی عمر اس سے چھوٹی ہے۔ جب میں کسی بلاگ پر تبصرہ کرتا ہوں تو زیک کی حیثیت سے نہ کہ محفل کے منتظم کی حیثیت سے۔

  5. Yasir Imran says:

    جناب زیک صاحب
    بہت شکریہ آپ نے اپنا موقف پیش کیا، آپ کے آخری پیراگراف کے مطابق یہ آپ کا ذاتی موقف ہے، نہ کہ محفل انتظامیہ کا
    چلیے قارئین کو فیصلہ کرنے دیتے ہیں۔

  6. خرم says:

    یاسر ۔ دیکھو میرے پیارے بھائی پانی میں مدھانی چلانے سے لسی تو نہیں بنے گی نا۔ ایک بات بتاؤ؟ آپ کا مقصد قادیانیوں کو ختم کرنا ہے یا قادیانیت کو؟ ابھی تک کسی بندے نے بھی قادیانیوں یا قادیانیت کی حمایت میں کوئی بات نہیں کی۔ آپ شانِ رسول صل اللہ علیہ وآلہ وسلم کی بات کرتے ہیں یہ بتائیے کہ جب مسیلمہ کذاب نے آقا صل اللہ علیہ وآلہ وسلم کو خط بھیجا جس میں اپنی جھوٹی نبوت کا دعوٰی کیا تھا تو سرکار علیہ الصلواۃ والسلام کا کیا ردعمل تھا؟ کیا آپ نے اسے قتل کرنے کے لئے فوج بھیجی تھی؟ قادیانیوں کو مُرتد قرار دینا بھی جہالت کی ہی بات ہے۔ جو پیدا ہی قادیانی ہوا وہ تو ہے ہی کافر اس پر ارتداد کا فتوٰی چہ معنی دارد؟ اور قرآن تو نرمی اور اچھے طریقے سے بحث کرکے لوگوں کو اسلام کی طرف مائل کرنے کا کہتا ہے۔ آپ کا یہ لکھنا کہ آپ کا بس چلے تو تمام قادیانیوں کو قتل کردیں انہیں اسلام سے متنفر تو کر سکتا ہے اسلام کی طرف مائل نہیں۔ پہلے بھی کسی نے لکھا کہ جب آپ ایک فورم پر جاتے ہیں تو ایک ذمہ داری ہوتی ہے میرے بھائی آپ پر کہ آپ مجلس کے آداب کا خیال رکھیں۔ فورم کے ماڈریٹرز کو اکثر اوقات ایسی پوسٹیں حذف کرنا پڑتی ہیں جن میں معقولیت سے زیادہ جذباتیت ہو۔ جذباتی ہونا بہت اچھی بات ہے لیکن کبھی کبھار اسے قابو میں بھی رکھنا ہوتا ہے جیسے ایک مُنہ زور گھوڑے پر سواری کے لئے اسے لگام دینا لازمی ہوتی ہے۔ کسی بھی مسلمان پر قادیانی ہونے کا شک بھی ظاہر کرنا کتنا تکلیف دہ ہوسکتا ہے اس کا اندازہ صرف اس بات سے لگالیں کہ کوئی آپ کے نام سے جُڑا “مرزا” دیکھ کر آپ کو قادیانی سمجھ لے تو آپ کے غم و غصہ کی کیا کیفیت ہوگی؟ سوچئیے کہ محفل کے منتظمین کی بھی کہیں یہی کیفیت تو نہ ہوئی تھی آپ کا سوال پڑھ کر؟ ان کے جواب سے تو یہی ثابت ہوتا ہے کہ انہیں اس بات پر شدید غم و غصہ تھا اور اسی بنا پر آپ کو بین کردیا گیا۔ تو اس سے زیادہ حُب نبی کی کیا شہادت مانگیں گے آپ میرے بھائی؟ یہ عمل تو انہوں نے قادیانیوں سے نفرت میں ہی اُٹھایا کہ اپنے آپ کو قادیانیت سے موسوم کرنا انہیں گوارا نہ ہوا۔ تو کیا پھر بھی آپکی ناراضگی بجا ہے ایسے لوگوں سے جو نبی پاک صل اللہ علیہ وآلہ وسلم سے محبت رکھتے ہیں؟

  7. یاسر بھیّا says:

    السّلامُ عَلَیۡکُمۡ

  8. میرا یہ سوال زیک سے ہے۔ سرکار آپ کو کس نے یہ سرٹیفیکٹ جاری کیا ہے کہ آپ دوسروں کی مسلمانی ناپتے پھریں۔؟
    کیا انٹرنیٹ پہ سات سال سے بلگ لکنے سے آپ دوسروں کی مسلمانی پہ ہیڈماسٹر لگ گئے ہیں،؟

    مجھے نہائت افسوس سے کہنا پڑتا ہے آپ بلاوجہ ہی قدیانی اور غیر قادیانی کی بحث مین کود پڑے۔ اگر آپ کو میری تجاویز سے الرجی تھی تو جوابی تجاویز دیتے یا کم از کم ایسا نہ کرنے کے حق میں دلائل ہیتے۔ مگر وہ جو کسی نے سچ کہا ہے کہ انسان جب تک اپنا منہ نہ کھولے ۔ اسکی اصلیت کا پتہ نہیں چلتا تو شاید درست ہی کہا ہے۔

  9. bhai mia is mamle mai nai parta
    pr ……….

    cho k ab aa hi gaya hon to

    itna hi kahon ga

    mortid wo hoty hain k jo muslim hon phr os se agy islam mai rehte hoye islam ki toheen karin

    olma ki tareeef apni jaga

    ye to mai ne on k fatwe dekh kr apni ray di hai

    jo apki maan ko gali de wo bora
    jo bap ko kahy wo bora
    jo watan ko bora kahy os ki jan le lain
    jo behan ki be izati kary os ko maaf na karin
    jo ap pr ongli othay os ka hath kat dalain
    or jo

    Allah or Rasool (SAWW) ki shan mai kuch bora keh de

    os k liye naram rawaiyah?
    os k liye ijtinab k esa nai kehte
    wesa nai kehte
    esa rule k khilaf hai
    wesa hona to nai chahiye

    bhai Allah or Rasool (SAWW) k khilaf jo b hoa
    mera azli nasli doshman hoa
    mia na to kabhi os ki himayat karon ga
    na hi ese kisi himaiti se taloq rakhon ga

    ye b meri apni ray hai

    or mai khod kehta hon esa mujhe kahin mila to os ko QATAL hi kr donga
    ya to os k khilaf jitan ho saka bayan likhon ga

    kia mia itna b nai kr sakta

    Siyasat ko bora keh sakte hain
    on ki videos b chala sakte hain

    Mosharaf Kutta
    Zardar Kutta
    or jane kon kon kia

    or Rasool SSWW ki be izzati krne wale ko bora na kaho Q??

  10. طارق راحیل صاحب!
    آپکی باتیں درست ہیں۔ جب بھی ختم نبوت محمد صلی اللہ علیہ وسلم کی بات ہوتی ہے تو ایک طبقہ قادینایوں (جنکا نیا نام احمدی ہے) واویلا شروع کردیتا ہے۔ میری سب سے یہ گزارش ہے کہ اگر آپ کو امرتد اور کافر منافق احمدیوں کے بارے میں علم نہیں تو پہلے ان سے معاملہ کر کے دیکھیں کہ وہ کس طرح کے بدطینت لوگ ہیں۔ پھر آپ انکے حق میں واویلا شروع کریں۔ اگر یہ کچھ لوگ ناموس رسالت محمد صلی اللہ علیہ وسلم کے لئیے اتنا بھی نہیں کر سکتے تو پھر کمر کس کر مرتد قدیانیوں اور عام مسلمانوں کے بیچ میں نہ کود پڑا کریں۔ چہ جائیکہ زیک جیسے لوگ اپنے زعم میں قادیانیوں کی کافر اور مرتد شناخت کو ظاہر کرنے والی بحث میں بغیر کسی وجہ کے مسلمانوں کی مسلمانی پہ انگلی اٹھاتے ہوئے تکلیف میں پڑیں۔

  11. Yasir Imran says:

    جاوید صاحب
    چلیں درگزر سے کام لے لیں۔ انٹرنیٹ پر ہر کوئی اپنی بات کہنے کے لیے آزاد ہے۔ اگر کوئی کسی کی ساتھ اچھے اخلاق کا مظاہرہ نہیں کرتا تو اسکی اپنی شخصیت کا معیار ہی کم ہوتا ہے۔ ویسے آپ کے بلاگ یا ویب سائٹ پر ہمیں کوئی حالات حاضرہ ، سیاست یا دین سے متعلقہ کوئی چیز نظر نہیں آتی، ایسا کیوں ؟
    شکریہ بہت

  12. یاسر بھائی!

    آپ نے بہت اچھا سوال اٹھایا ہے۔ جسکے لئیے میں آپ کا شکریہ ادا کرتا ہوں ۔ کہ یوں مجھے اپنے بارے میں وضاحت کرنے کا موقع مل گیا ہے۔

    یاسر بھائی۔ میری مصروفیات گوناں گوں قسم کی ہیں۔ جن سے وقت نکالنا میرے لئیے بہت مشکل ہوتا ہے۔ پچھلے دنوں میں نے ڈفر بھائی ۔ کے بلاگ پہ رائے دیتے ہوئے لکھا تھا کہ جسے کوئی غم نہ ہو وہ ایک عدد بلاگ پال لے۔ بس پھر اللہ دے اور بندہ لے۔ یعنی سر کجھانے کی بھی فرصت نہ ملے۔ کیونکہ میری ذاتی رائے میں آپ جیسے ماشاءاللہ بہت سے لوگ بہت مختلف موضوعات میں اردو انگریزی بلاگز پہ نہائت اچھا کام کر رہے ہیں۔ گو ہمراے بلاگرز کی تعداد کم ہے اور انھیں پڑھنے والوں کی تعداد تو اور بھی کم ہے۔ مگر یہ دھیرے دھیرے بڑھ رہی ہے، اسلئیے میں نہیں سمجھتا کہ میں بہت اہم قسم کی دوسری ضروری مصروفیات چھوڑ کر ایک عدد بلاگ پال کر بیٹھ جاؤں ۔ الحمد اللہ کمپیوٹر ٹیکنالوجہ پہ مجھے کافی سے زیادہ حد تک عبور ہے، اور میں ایک چھوڑ کئی ایک سائٹس اور ڈومین خرید سکتا ہوں۔ پہلے بھی کچھ کاروباری سائٹس ہیں۔ اور دو ایک ذاتی بھی ہیں۔ کسی بھی ویب پہ ایک ایکسٹنشن سے بلاگ منٹوں میں بن جاتا ہے ۔ مگر پھر اسکا روزانہ پیٹ بھرنا اور ان گنت سوالات کا جواب دینے کی پابندی صاحب بلاگ کو عاجز کر دیتی۔ چونکہ وقت نام کی شئے میری مصروفیات کو سمیٹے رکھتی ہے۔ اس لئیے جب موقع ملتا ہے میں اردو بلاگز کا ایک آدھ چکر لگا لیتا ہوں اور جہاں ضرورت محسوس کروں اپنے رائے پیش کر دیتا ہوں۔

    عموما نہائت سرعت سے لکھتا ہوں بعض اوقات لکھنے اور خیالات کی یلغار اسقدر تیز ہوتی ہے کہ لکھنے میں بہت سے حروف آگے پیچھے ہوجاتے ہیں اور املاء کی غلطیاں وقت کی کمی کی وجہ سے درست نہیں کر پاتا ۔ مگر ایک بات ذہن میں ہوتی ہے میں نے اپنی رائے میں اپنا فرض پورا کر دیا ہے۔

    میں نے بہت مختلف ناموں سے لکھا ہے۔ اور انشاءاللہ جب فراغت میسر آئی یا میں نے ضرورت محسوس کی تو ضرور ایک نیا بلاگ بناؤں گا

Leave a Reply

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

You are commenting using your WordPress.com account. Log Out / Change )

Twitter picture

You are commenting using your Twitter account. Log Out / Change )

Facebook photo

You are commenting using your Facebook account. Log Out / Change )

Google+ photo

You are commenting using your Google+ account. Log Out / Change )

Connecting to %s