دیارِ غیر میں شوھر کو بیوی کا خط – ہفتہ بلاگستان یوم مزاح


میں ضرورت سے زیادہ تاخیر کر چکا ہوں ہفتہ بلاگستان میں، خیر یوم مزاح کے حوالے سے یہ نظم سب کی نظر

ملا جب سے خط پیارےکہ چھٹی آ رھے ھو تم
میرے خوابوں پہ صبح و شام یکسر چھا رھے ھو تم
جب آؤ گے وہ دن میرے لئے دن عید کا ھو گا
عجب منظر میرے دلبر تیری دید کا ھو گا
بہت وزنی سے دو اک بیگ پیارے ہاتھ میں ھوں گے
اٹیچی کیس دس بارہ یقینا ساتھ میں ھوں گے
کلر ٹی وی تو ڈبےھی سے میں پہچان جاؤں گی
فرج بھی ساتھ لاۓ تو میں تم کو مان جاؤں گی
میں ائرپورٹ پر آؤں گی اپنی جان کو لینے
سوزوکی وین بھی لاؤں گی سب سامان کو لینے
تمھارا ٹھاٹ دیکھوں گی تو یہ دل مسکراۓ گا
کھلیں گے بکس جب گھر میں تو یہ دل گنگناۓ گا
بہارو پھول برساؤ میرا محبوب آیا ھے
جاپانی ساڑھیاں میرے لیۓ کیا خوب لایا ہے
مجھے تو کچھ نہیں لینا مگر یہ دنیا بھی رکھنی ہے
پوزیشن کچھ تو اپنی اس موئی دنیا میں رکھنی ہے
مجھے کچھ چاھیۓ کپڑا یہی کرتے بنانے کو
کوئ چالیس گز کے ٹی دینے اور دلانے کو
دو درجن پرفیوم اور رومال کافی ہیں
دوپٹوں کے فقط اس مرتبہ دو تھان کافی ہیں
وہاں سے لکس صابن بھی کوئی دس بیس لے آنا
گرم سوٹوں کے کپڑے کے یہی چھ پیس لے آنا
میرے بھیا کی راڈو واچ اب کے بھول نہ جانا
میری تو خیر ھے ، باجی کی ساڑھی ساتھ ھی لانا
یہ کیا لکھا ھے کہ اب کے مستقلا آ رھے ھو تم
امیدیں پیارے مستقبل کی کیوں ٹھکرا رھے ھو تم
ابھی تو ھم کو رھنے کے لیۓ بنگلہ بھی لینا ھے
ایک ھونڈا کار اور جانے ابھی کیا کیا لینا ھے
میرے دلبر میری باتوں پہ تھوڑا غور کر لینا
بس ایگریمنٹ تم دو سال کا اک اور کر لینا
بسایا ھے سدا میں نے تمھیں اپنے خیالوں میں
دعا یہ ھے، رھو تم ھر کھیلتے ھر دم “ریالوں” میں
خدا حافظ میرے جانی جواب اب جلد لکھ دینا
کب آئیں گی میری چیزیں جناب اب جلد لکھ دینا


About Yasir Imran

Yasir Imran is a Pakistani living in Saudi Arabia. He writes because he want to express his thoughts. It is not necessary you agree what he says, You may express your thoughts in your comments. Once reviewed and approved your comments will appear in the discussion.
This entry was posted in Entertainment, Poetry, Urdu and tagged , , , , , , , , , , , , , , . Bookmark the permalink.

7 Responses to دیارِ غیر میں شوھر کو بیوی کا خط – ہفتہ بلاگستان یوم مزاح

  1. Bohat Khoob Kiya Baat Hai Kis Na Likhe Hai

  2. آپ نے تو حال دل کھول کر رکھ دیا ہے۔

  3. Yasir Imran says:

    کامی صاحب
    پتہ نہیں کس نے لکھی ہے بس کہیں سے مل گئی

    میرا پاکستان
    جی نہیں، یہ صرف مزاح ہے :-)

  4. خرم says:

    بہت خوب بھیا۔ تو پھر آپ نے کانٹریکٹ بڑھوا لیا کیا؟

  5. Yasir Imran says:

    خرم صاحب ، ابھی ہمیں خط موصول نہیں ہوا :-)

  6. عمر حیات مغل says:

    کیا بات ھے جی چھا گئے ھو ایسا ھی لکھتے رھو
    الللا کرئے زورے قلم اور زیادہ

  7. Taheem says:

    ایسا کم ہی دیکھنے میں آتا یے جناب

Leave a Reply

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

You are commenting using your WordPress.com account. Log Out / Change )

Twitter picture

You are commenting using your Twitter account. Log Out / Change )

Facebook photo

You are commenting using your Facebook account. Log Out / Change )

Google+ photo

You are commenting using your Google+ account. Log Out / Change )

Connecting to %s