پاکستان کی موجودہ صورت حال اور سیاستدان


Nawaz Sharifپاکستان اور پنجاب کی موجودہ صورت حال، یعنی زرداری صاحب کا شریف برادران کو چالاکی سے حکومت سے نکالنا اور اپنا مطلب نکال لینا، اس پر نواز شریف اور شہباز شریف کافی غصے میں دکھائی دے رہے ہیں، حالانکہ زرداری صاحب کی یہ پہلی چالاکی نیں ہے، الیکشن کے بعد سے اب تک وہ کئی بار جھوٹے وعدے کر چکے ہیں، ہمیشہ انہوں نے اپنا راستہ صاف کیا اور نواز لیگ کے ساتھ ٹال مٹول کرتے رہے مگر شریف برادران نے صبر کا دامن تھامے رکھا اور آس قائم رکھی کہ شاید زرداری صاحب بے نظیر بھٹو کی موت سے فائدہ حاصل کرنے کے ساتھ ساتھ ایک عدد اچھا عمل بھی کر لیں، مگر شاید زرداری صاحب نے موجودہ رتبہ حاصل کرنے کے لیے امریکی ارباب اختیار سے کوئی ڈیل بھی کر رکھی ہے کہ وہ پاکستان میں انصاف اور خوشحالی نیں آنے دیں گے، اسی لیے نہ تو ۳ نومبر کے مشرف کے اقدامات کو غلط تسلیم کیا جارہا ہے اور نہ جج بحال کیے جا رہے ہیں، ججوںکی بحالی کے بغیر اس ملک میں امن قائم ہو سکتا ہے نہ کرپشن اور دھاندلی ختم ہو سکتی ہے

 

موجودہ حالات میں شریف برادران جوشیلی تقاریر سے عوام کو اس مقصد میں شامل ہونے کے لیے قائل کر رہے ہیں کیوں کہ انہوں نے سمجھ لیا ہے کہ زرداری صاحب سیدھی طرح کوئی بھی مطالبہ تسلیم نہں کریں گے، میرے خیال میں یہی طریقہ کار مناسب ہے کیونکہ لاتوں کے بھوت باتوں سے نہیں مانتے

 

نواز شریف صاحب کی تازہ ترین تقریر ۔۔۔۔۔

 ملک کے مستقبل کیلئے عوام کو سڑکوں پر آنا ہوگا، ریموٹ کنٹرول پارلیمنٹ اور عدلیہ نہیں چلنے دی جائے گی۔ فیصل آباد میں جلسہ عام سے خطاب میں میاں نواز شریف نے کہا کہ وہ ملکی مفاد میں عدلیہ کی آزادی اور 17ویں ترمیم کے خاتمے کیلئے مفاہمت پر تیار ہیں۔ انھوں نے کہا کہ صدر زرداری عدلیہ بحال کردیں تو وہ آئندہ چار سال تک کچھ نہیں مانگے گے۔ واز شریف نے کہا کہ شہباز شریف آئینی اور قانونی وزیراعلیٰ ہیں اور جلد اپنا منصب سنبھال لیں گے۔ مسلم لیگ نواز کلے قائد کا کہنا تھا کہ بے نظیر بھٹو کے قاتلوں کو پکڑا جائے، راولپنڈی میں ان کی یادگار پر توڑ پھوڑ کرانے والی لیگی کارکن نہیں ہیں۔ مسلم لیگ نواز کے قائد میاں محمد نواز شریف نے کہا ہے کہ وہ سپریم کورٹ کے فیصلوں کو نہیں مانتے،صحیح عدالت عوام ہیں۔ انہوں نے کہا کہ عوام دھوکے اور منافقت کی سیاست کو ہمیشہ کے لیے ختم کردینگے۔ انہوں نے کہا کہ تبدیلی کے لیے عوام سولہ مارچ کو گھروں سے باہر نکلیں گے۔ انہوں نے کہا کہ مشرف نے مجھ سے بہت بار رابطے کیے اور ملنے کی خوہش ظاہر کی لیکن میں نے ہمیشہ ملنے سے انکار کیا۔ جلاوطنی قبول کرلی لیکن آئین توڑنے والوں سے ہاتھ نہیں ملایا۔ ہم نے پیپلز پارٹی کا ساتھ نبھانے کے لیے ہر ممکن کوششیں کیں لیکن زرداری صاحب نے ہمیں دھوکہ دیا۔ انہوں نے کہا کہ میں بار بار کہہ چکا ہوں مجھے کچھ نہیں چاہیے صرف عدلیہ کو بحال کردیں عوام کو ان کا حق دے دیں۔ میں یہ سوال کرتا ہوں کہ کیا یہ ملک یہ عدلیہ یہ پارلیمنٹ آصف زرداری کی ملکیت ہیں۔ یہ عوام کی ملکیت ہیں۔ پاکستان کے عوام یہ سب نہیں چلنے دیگی۔ انہوں نے کہا کہ میں مفاہمت کے لیے تیار ہوں لیکن یہ مفاہمت نوٹوں کے لیے نہیں بلکہ عوام کے لیے ہوگی۔

PAKISTAN-POLITICS-ELECTION-SHARIF

 

 

سب سے برا کردار پاکستان پیپلز پارٹی کے ممبران کا ہے جو اپنے فائدے کے لیے زرداری کی بے جا ہمایت کرتے جا رہے ہیں، کوئی بھی سچ کا ساتھ دینے کو تیار نہیں، ایک عقل رکھنے والا آدمی بہ خوبی اندازہ کر سکتا ہے کہ زرداری صاحب اس ملک ساتھ مخلص نہیں بلکہ صرف منصب صدارت چاہتے ہیں

ایسے میں بلاول بھٹو کو بھی چاہیے کہ وہ اپنی ذمہ داری نبھاتے ہوے اپنے والد صاحب کو پاکستان اور پاکستانی عوام کے ساتھ کھیلنے سے باز رکھیں، ایک محب وطن پاکستانی کی حیثیت سے اپنے والد کی بجائے اسے اپنے ملک کا ساتھ دینا چاہیے، بلاول صاحب ہم سب کو آپ سے مثبت امیدیں وابستہ ہیں ، برائے مہربانی آئیے اور اپنے ملک کو ان مصیبتوں سے نکالیے

 

 


About Yasir Imran

Yasir Imran is a Pakistani living in Saudi Arabia. He writes because he want to express his thoughts. It is not necessary you agree what he says, You may express your thoughts in your comments. Once reviewed and approved your comments will appear in the discussion.
This entry was posted in Urdu and tagged , , , , , , , , , , , , , , , , , , , . Bookmark the permalink.

3 Responses to پاکستان کی موجودہ صورت حال اور سیاستدان

  1. Jafar says:

    ۔۔۔ ماشاءاللہ سیاست کا کافی شوق رکھتے ہیں۔۔۔ اللہ کرے زور قلم اور زیادہ۔۔۔
    بلاول والے نقطہ نظر سے میں متفق نہیں۔۔۔ رزق حرام پر پلنے والے سے اچھی امید نہیں رکھی جاسکتی ۔۔۔

  2. Yasir Imran says:

    جی آپ ٹھیک فرما رہے ہیں، مگر امید پر دنیا قائم ہے
    میرے بلاگ پرآنے کے لیے شکریہ آتے جاتے رہیے گا

  3. شریف برادران کو سیاست نہیں آتی کیونکہ سیاست دھوکہ اور مکاری کا نام ہے

Leave a Reply

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

You are commenting using your WordPress.com account. Log Out / Change )

Twitter picture

You are commenting using your Twitter account. Log Out / Change )

Facebook photo

You are commenting using your Facebook account. Log Out / Change )

Google+ photo

You are commenting using your Google+ account. Log Out / Change )

Connecting to %s