ڈاکٹر عافیہ صدیقی نیویارک منتقل


پاکستانی نژاد امریکی ڈاکٹر عافیہ صدیقی کو نیویارک منتقل کردیا گیا، آج عدالت میں پیش کیا جائے گا، ایف بی آئی اور نیویارک پولیس حکام کا دعویٰ، امریکی خفیہ ایجنسی نے ای میل کے ذریعے منتقلی سے متعلق آگاہ کیاہے ، فوزیہ صدیقی

Dr. Afia Siddiqui Moved to USA

Dr. Afia Siddiqui Moved to USA

اسلام آباد (اُردو پوائنٹ تازہ ترین۔ 5اگست 2008ء)امریکی ٹی وی چینل نے دعویٰ کیا ہے کہ پاکستانی نڑاد امریکی ڈاکٹر عافیہ صدیقی کو نیویارک منتقل کردیا گیا ہے ۔ جہاں انہیں آج عدالت میں پیش کیا جائے گا، ان پر امریکی فوجی اور خفیہ اداروں کے اہلکاروں پر فائرنگ کا الزام ہے ۔ نیو یارک میں سی این این نے امریکی فیڈر ل پراسیکیوٹر کے حوالے سے بتایا ہے کہ ڈاکٹر عافیہ صدیقی پر گزشتہ ماہ افغانستان کی جیل میں امریکی فوج کے اہلکاروں پر فائرنگ کا الزام ہے ۔ پر اسیکیورٹر کا کہنا ہے کہ افغان جیل میں اٹھارہ جولائی کو ایف بی آئی کے دو اسپیشل ایجنٹس نے مترجم کے ہمراہ جب عافیہ صدیقی کمرے میں داخل ہو ئے تو امریکی نڑاد پاکستانی خاتون نے ایجنٹ کی رائفل سے دو نوں امریکی افسر پر فائرنگ کی۔ امریکی حکام کے مطابق امریکی افسر کی جوابی فائرنگ سے عافیہ صدیقی زخمی ہو گئیں جنہیں طبی امداد فراہم کی گئی۔ امریکی حکام نے دعویٰ کیا کہ افغان سیکورٹی فورسز نے عافیہ صدیقی کو گورنز غزنی کے دفتر کے باہر سے سترہ جولائی دوہزار آٹھ کو دستاویز کے ہمراہ گرفتا ر کیا تھا۔ امریکی حکام کا کہناہے کہ دستاویز میں بم بنانے سے متعلق ہدایات درج تھیں۔ دوسری جانب عافیہ صدیقی کی ہمشیرہ نے کہاہے کہ امریکی خفیہ ایجنسی ایف بی آئی نے عافیہ صدیقی کو امریکہ منتقل کرنیکی تصدیق کردی ہے ۔ فوزیہ صدیقی نے نجی ٹی وی سے گفتگوکرتے ہوئے بتایا کہ امریکی حکام کی جانب سے انہیں ایک ای میل موصول ہوئی ہے جس میں بتایا گیا ہے کہ ڈاکٹر عافیہ صدیقی کو امریکہ منتقل کردیا گیا ہے اور آج انہیں عدالت میں پیش کیاجائیگا۔ انہوں نے بتایاکہ امریکی حکام کی جانب سے بھیجی جانیوالی ای میل میں ان پر مختلف نوعیت کے سنگین الزامات عائد کئے گئے ہیں جو بے بنیاد ہیں۔ ادھر امریکا میں متعین پاکستانی سفیر حسین حقانی پاکستانی نڑاد امریکی ڈاکٹر عافیہ صدیقی کو سفارتیا حلقوں تک رسائی دلانے کے لئے کوششیں کر رہے ہیں واشنگٹن سے نمائندہ نجی ٹی وی کے مطابق حسین حقانی نے بش انتظامیہ سے درخواست کی ہے کہ ڈاکٹر عافیہ صدیقی کو سفارتی حلقوں تک رسائی کی اجازت دی جائے تاکہ ان کا موقف سامنے آسکے ۔

05/08/2008 11:43:31 : وقت اشاعت


About Yasir Imran

Yasir Imran is a Pakistani living in Saudi Arabia. He writes because he want to express his thoughts. It is not necessary you agree what he says, You may express your thoughts in your comments. Once reviewed and approved your comments will appear in the discussion.
This entry was posted in News. Bookmark the permalink.

Leave a Reply

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

You are commenting using your WordPress.com account. Log Out / Change )

Twitter picture

You are commenting using your Twitter account. Log Out / Change )

Facebook photo

You are commenting using your Facebook account. Log Out / Change )

Google+ photo

You are commenting using your Google+ account. Log Out / Change )

Connecting to %s