بارش کے بعد جدہ کی سڑکوں کا منظر


السلام علیکم
جدہ میں بارش کم ہی ہوتی ہے ، زیادہ سے زیادہ سال میں دو تین مرتبہ۔ لیکن جب بھی ہوتی ہے تو پورا شہر دریا کا منظر پیش کرنے لگتا ہے۔ کم بارشیں ہونے کی وجہ سے حکومت نے شروع سے ہی یہ مناسب نہیں سمجھا کہ شہر میں سیورج کا ایک اچھا نظام بنایا جائے۔ تاہم حالیہ کچھ سالوں میں شہر کے کچھ علاقوں میں واٹر سیورج کا نظام بنانے کی طرف توجہ دی جا رہی ہے۔ لیکن ابھی بھی زیادہ تر رہائشی علاقوں میں زمیں میں بڑے بڑے گڑھے کھود کر ان میں گھر کے استعمال شدہ پانی کی لائن ڈال دی جاتی ہے۔ جو زیر زمین جذب ہوتا رہتا ہے اور کبھی کبھی سڑکوں اور گلیوں میں ابل بھی آتا ہے۔

بارشی پانی کے لیے شہر میں ایک دو بڑے نالے موجود ہیں لیکن تیز بارش کی صورت میں وہ پانی کو شہر سے باہر بہا لے جانےکے لیےناکافی ہو جاتے ہیں۔ایسے میں جدہ شہر میں کچھ ایسے مناظر دیکھنے کو ملتے ہیں۔


More similar to this at my blog

A Saudi Arabian wedding

Masjid Nabvi Photography

روائع المکتبات جدہ کا ایک واٹر پارک

About Yasir Imran

Yasir Imran is a Pakistani living in Saudi Arabia. He writes because he want to express his thoughts. It is not necessary you agree what he says, You may express your thoughts in your comments. Once reviewed and approved your comments will appear in the discussion.
This entry was posted in Pictures, Urdu and tagged , , , , , , , , , , , . Bookmark the permalink.

10 Responses to بارش کے بعد جدہ کی سڑکوں کا منظر

  1. Pingback: Tweets that mention بارش کے بعد جدہ کی سڑکوں کا منظر: -- Topsy.com

  2. Shah Faisal says:

    مطلب پاکستان والی حالت ہے :)

  3. m.d says:

    یاسر بھائی ۔السلام علیکم ۔ تصاویر میں جدہ کی حالت دیکھ کر حیرت ہوئی۔چونکہ آثار قدیمہ کے کھنڈرات ہمیں بتاتے ہیں کہ قدیم باشندے بھی اپنی بستیوں میں نکاسی آب کا معقول انتظام کرتے تھے ۔جبکہ جدہ تو اب ایک جدید شہر کہلاتا ہے تو پھر یہ گڑھے کھود نے والی بات کے کیا معنی؟ بلکہ ایک صاحب نے تو مُجھے یہ بھی بتایا ہے کہ جدہ میں کسی گھر پر گھر کی شناخت کا نمبر بھی نہیں ہوتا ہے ۔ تو پھر گھروں کی خرید فروخت کیسے ہوتی ہوگی ہے ؟ بہرحال معلومات فرہام کرنے پر آپکا بُہت شُکریہ ۔

    • Yasir Imran says:

      وعلیکم السلام
      ایم ڈی بھائی۔کم و بیش ہر شہر میں ایک بستی نما علاقہ ہوتا ہے اور ایک امیروں کی کالونی نما۔ جو اچھا علاقہ ہے جہاں وی آئی پی لوگ بستے ہیں وہاں آپکو جدید طرز کی کافی سہولیات نظر آئیں گی۔ جب کہ غریبوں کی بستی کی حالت بہت بری ہے۔ بلدیہ کا نظام اتنا اچھا نہیں تو اتنا برا بھی نہیں۔ تعلیم یافتہ لوگوں کی کمی کی وجہ سے ان کہا ہاں ترقی بڑی سست رفتار سے ہو رہی ہے۔ اور پلاننگ وغیرہ کے لیے یہ لوگ غیر ملکیوں کے محتاج ہیں۔
      تبصرہ کرنے کا شکریہ

  4. mdanishtaha says:

    Thanks bother…app ny to bethy bethy Jdah ki sair karwa di…

  5. جدّہ کا مسئلہ یہ ہے کے یہاں بارشیں نہیں ہوتی تھیں اسی لئے نکاسی آب یہاں کی منصوبہ بندی کا حصّہ کبھی نہیں رہے. لیکن اب شاید ارضیاتی یا موسمیاتی تبدیلیوں کے باعٽ بارشوں کا سلسلہ شروع ہوگیا ہے جس کی وجہ سے یہ تباہی دیکھنے کو ملی ہے….لیکن اب یہ لوگ نکاسی کے منصوبے شروع کر چکے ہیں لیکن ظاہر ہے وقت تو لگے گا.

    • Yasir Imran says:

      جی بالکل ایسا ہی ہے۔ لیکن شہر کے بیچوں بیچ جو گڑھے کھودنے کا نظام ہے وہ بالکل غیر مناسب ہے۔ گندگی کو اگر آپ اپنے گھر کی چوکھٹ کے ساتھ ہی دفن کرتے رہیں گے تو اسکا اثر نباتات، وہاں کی فضا اور ماحول پر بہت گہرا پڑے گا۔
      شکریہ

  6. Pingback: Jeddah Photo Blog – Photography of Jeddah city | Yasir Imran Mirza

Leave a Reply

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

You are commenting using your WordPress.com account. Log Out / Change )

Twitter picture

You are commenting using your Twitter account. Log Out / Change )

Facebook photo

You are commenting using your Facebook account. Log Out / Change )

Google+ photo

You are commenting using your Google+ account. Log Out / Change )

Connecting to %s