ایک خوبصورت لوک گیت – ایک الف


نوری میوزک بینڈ اپنا ایک منفرد انداز رکھتا ہے جو سب دوسرے گانے والوں سے الگ ہے، نوری کے گانوں میں پاپ موسیقی کے ساتھ ساتھ لوک موسیقی کی جھلک بھی نظر آتی ہے۔ پہلے بھی نوری کا ایک گانا منوا رے بہت مشہور ہوا۔ یہ گانا جس میں اللہ سایاں کو پکارا جارہا ہے لوک موسیقی کے طرز پر ہے، اس گانے میں نوری کے فنکاران علی نور اور علی حمزہ کے ساتھ سائیں ظہور بھی گا رہے ہیں۔ گانے کا نام ہے “ایک الف ” کلام بابا بلھے شاہ کا ہے، نئے اور پرانے دونوں طرز کے موسیقی کے آلات استعمال کیے گئے ہیں۔ ایک دفعہ ضرور سنیں، شکریہ, نیچے میں نے اس گانے کی ساری شاعری بھی لکھ دی ہے

پڑھ پڑھ علم تے فاضل ہویوں
وے کدے اپنے آپ نوں پڑھیا نائیں

بج بج وڑنا ایں مندر مسیتی
وے کدے من اپنے وچ وڑیا نائیں
لڑنا روز شیطان دے نال
وے کدے نفس اپنے نال لڑیا نائیں
بلھے شاہ آسمانی اڈدیاں پھڑو نائیں
وے جیڑا گھر بیٹھا اونہوں پھڑیا نائیں
بس کریں او یار علمو
بس کریں اور یار
اکو الف تیرے درکار حق
بس کریں او یار علمو
بس کریں اور یار
اللہ ، سایاں
اللہ ، سایاں

نی میں
جانا
نی میں جانا
جانا
جوگی دے نال
نی میں جانا
جوگی دے نال

جو نہ جانے
حق کی طاقت
رب نے دیوے
اس کو ہمت
ہم من کے دریا میں ڈوبے
کیسی نیا، کیا منجدھار، حق
بس کریں او یار علمو
بس کریں اور یار
اللہ ، سایاں
اللہ ، سایاں


About Yasir Imran

Yasir Imran is a Pakistani living in Saudi Arabia. He writes because he want to express his thoughts. It is not necessary you agree what he says, You may express your thoughts in your comments. Once reviewed and approved your comments will appear in the discussion.
This entry was posted in Entertainment, Urdu and tagged , , , , , , , , , , , , , . Bookmark the permalink.

5 Responses to ایک خوبصورت لوک گیت – ایک الف

  1. کلام بابا بلھے شاہ کا ہے
    اسلیئے میوزک نہیں ہونا چاہیے تھا

  2. یاسر! یہ نوری کے ساتھ سائیں ظہور نے نہیں بلکہ سائیں ظہور کے ساتھ نوری نے گایا ہے :) مطلب سمجھ گئے نا؟ دراصل یہ گانا سائيں ظہور کا ہے۔ آپ کے اس جملے سے یہ لگتا ہے کہ گانا دراصل نوری کا ہے۔
    خیر بہت ہی زبردست گایا ہے سائیں ظہور اور نور دونوں نے۔ البتہ چند گانوں کی ٹھیک ٹھاک مٹی پلید کی ہے جیسے “یار ڈاڈھی عشق و آتش” اور “مائے نی میں کینوں آکھاں” ۔۔۔ علی ظفر اور عاطف اسلم اس پائے کے گلوکار نہیں کہ ان سے یہ سریلے کلام گوائے جاتے۔ کوک اسٹوڈیو والے کسی کلاسیکی گلوکار کو بھی بلا سکتے تھے۔

  3. Yasir Imran says:

    لالے کی جان
    آج کل کے گلو کار موسیقی کی بنا گاتے ہیں، مگر موسیقی ہو پھر بھی کوئی اتنا حرج تو نہیں
    رائے دینے کا شکریہ

    ابو شامل صاحب
    جی ہو سکتا ہے آ ٹھیک فرما رہے ہوں، لیکن اب چونکہ یہ گانا نوری بھی گا رہا ہے تو ہم اسے مشترکہ گانا بھی کہہ سکتے ہیں ،کیا خیال ہے
    باقی گانے تو میں نے سنے نہیں، لیکن نوری والوں نے یہ گانا کوک سٹوڈیو سے گایا اسکی بجائے خود سے گاتے تو ہہتر ہوتا

  4. Jawad says:

    FYI, it is not a lok geet, it is sofiana kalam. Correct the title of the blog.

Leave a Reply

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

You are commenting using your WordPress.com account. Log Out / Change )

Twitter picture

You are commenting using your Twitter account. Log Out / Change )

Facebook photo

You are commenting using your Facebook account. Log Out / Change )

Google+ photo

You are commenting using your Google+ account. Log Out / Change )

Connecting to %s